urdu maloomatUrdu Tipsصحت

یہ برتن کیمیکلز سے پاک ہوتے ہیں اور زہریلے مادوں کو جسم میں داخل ہونے سے روکتے ہیں ۔ اس لیے گھر میں ہمیشہ یہی برتن استعمال کریں ۔

پرانے زمانے میں لوگ پینے کے پانی کو ذخیرہ کرنے کے لیے مٹی کے برتنوں کا استعمال کرتے تھے، نہ کہ پانی کے فلٹر جو کہ آج کل استعمال ہوتے ہیں اور مٹی کے برتن پانی کو قدرتی طور پر ٹھنڈا رکھنے میں بھی مدد دیتے تھے۔یہ قدیم طرزِ عمل نہ صرف کنٹینرز یا شیشے کا روایتی متبادل ہے، بلکہ پینے کے لیے ایک صحت مند اور علاج کا بہترین انتخاب بھی ہے۔ یہاں ہم مٹی کے برتن میں پانی پینے کے فوائد بتاتے ہیں۔

مٹی کے برتن ٹھنڈے ہوتے ہیں:
مٹی کے برتن عام طور پر ذخیرہ شدہ پانی کو ٹھنڈا رکھنے میں مدد فراہم کرتے ہیں۔ شدید گرمی کے حالات میں بھی آپ فریج کے بجائے مٹی کے برتنوں جیسے مٹکے وغیرہ میں پانی ذخیرہ کریں۔

مٹی کے برتن کیمیکل سے پاک ہوتے ہیں:
آپ پلاسٹک کی بوتلیں پانی کو ذخیرہ کرنے کے لیے استعمال کرتے ہیں جو کیمیکلز سے بنی ہوتی ہیں۔ تاہم مٹی کے برتن کیمیکلز سے پاک ہوتے ہیں اور یہ زہریلے مادوں کو جسم میں داخل ہونے سے بھی روکتے ہیں۔

مٹی کے برتن کا پانی صاف ہوتا ہے:
مٹی کے برتن میں پانی فطرت میں الکلائن ہوتا ہے اس لیے یہ جسم کے پی ایچ لیول کو برقرار رکھنے میں مدد فراہم کرتا ہے۔ اگر آپ کے جسم کا پی ایچ توازن بگڑ جائے تو آپ کو ہاضمے کے مسائل یا معدے کے مسائل بھی ہو سکتے ہیں۔

مٹی کے برتن والا پانی گلے کے لیے بہترین ہے:
اگر آپ زکام یا دمہ کا شکار ہیں تو فریج کا پانی پینے سے آپ کی حالت مزید خراب ہو سکتی ہے۔ تاہم، مٹی کے برتن سے پانی پینا آپ کے گلے کے لیے بہت فائدہ مند ہے، کیونکہ یہ زیادہ ٹھنڈا نہیں ہوتا اور اس کا درجہ حرارت بھی مناسب ہوتا ہے۔

Show More

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button