urdu maloomatUrdu Tipsدلچسپصحت

کیلے کے چھلکے سے خوبصورت ہونے کے ساتھ اب سمارٹ بھی بنیں

کیلے کے چھلکوں کو پانی میں صرف 20 منٹ کے لیے بھگودیں اور آپ پھر اس پانی کا کمال دیکھیئے۔ اس پانی کے فوائد دیکھ کر آپ بھی حیران رہ جائیں گے ۔
کیلا ہر موسم کا پھل ہے ۔ جسے بچے اور بڑے سب بہت شوق سے کھاتے ہیں ۔ کیلے کے بے شمار فوائد ہیں لیکن کیلے کے چھلکوں کا ایک نیا استعمال اور 5 بڑے فائدے جان کر آپ یقیناً حیران رہ جائیں گے ۔
اب کیلے کے چھلکوں کو پھینکنے کی بجائے ان کو 2 کپ پانی میں بھگو کر 30 منٹ کے لئے ایسے ہی رکھ دیں ۔ بھگونے سے پہلے چھلکوں کو ایک مرتبہ پانی سے اچھی طرح دھو کر صاف کر لیں تاکہ دھول مٹی اور گندگی وغیرہ نہ رہے۔
اس پانی سے آپ کو 5 بڑے فائدے حاصل ہوں گے جو آپ کی روزمرہ کی ضروریات کے لیے بہت فائدےہ مند ہیں:

کیلے کے چھلکوں کا پانی ایک دم خالص اور صاف و شفاف ہوتا ہے اس لئے اگر گھر کے ٹینک میں گندگی جمع ہو گئی ہے یا پھر صاف پانی میسر نہ ہو تو یہ کیلے کے چھلکوں کا پانی ، اس پانی والی ٹینک میں ڈال دیں اس سے ٹینک میں موجود سارا پانی صاف ہو جائے گا۔

کیلے میں کیونکہ آئرن کی وافر مقدار پائی جاتی ہے اس لئے یہ اچھی طرح صفائی کرنے کے کام آتا ہے۔ ایسے برتن جن پر جمی میل کچیل ڈیٹرجنٹ سے بھی صاف نہ ہو رہی ہو یا پھر جن برتنوں پر چائے اور کافی کے نشانات پڑ گئے ہوں تو ان برتنوں کو کیلے کے چھلکوں کے اس بھیگے ہوئے پانی میں ڈال کر 15 منٹ ہلکی آنچ پر پکا لیں اور پھر جب پانی نیم ٹھنڈا ہو جائے تو ان برتنوں کو ایک کپڑے سے صاف کرلیں ۔ اس سے ہر قسم کے گندے برتن چمکدار اور صاف ہو جاتے ہیں۔

کچھ لوگوں کے ناخنوں میں فنگس وغیرہ ہو جاتی ہے جس کے لئے ان کو مختلف قسم کی دوائیاں استعمال کرنی پڑتی ہیں ۔ اب دوائیوں کو چھوڑیں اور کیلے کے چھلکوں کا یہ پانی لے لیں اور اس پانی میں ایک چمچ سونٹھ جسے ادرک کا پاؤڈر کہا جاتا ہے اس کو مکس کرلیں اور اس پانی کو فنگس والے ناخنوں پر لگا کر پٹی باندھ لیں اور 20 منٹ کے بعدناخنوں کو عرق گلاب سے صاف کر لیں۔ اس ٹپ کو آپ روزانہ استعمال کریں ۔ اس سے آپ کے ناخنوں میں لگی ہوئی فنگس آہستہ آہستہ بالکل ختم ہوایک جائے گی اور آپ کے ناخن دم صاف ستھرے ہو جائیں گے۔

بڑھتا ہوا وزن کم کرنے کے لئے مختلف قسم کی چائے تو آپ پیتے ہی رہتے ہیں لیکن آج کیلے کی چھلکوں کی چائے بنانا بھی سیکھ ہی لیں اور 3 ماہ میں جسم کی چربی کو پگھلا کر آپ بھی سلم اور سمارٹ ہوسکتے ہیں ۔ وہ پانی جس میں کیلے کے چھلکے بھیگے ہوئے ہوں اس پانی کو اُبال کر اس میں ایک چٹکی سوکھی ادرک کا پاؤڈر ڈال کر اس پانی کو دن میں 2 بار روزانہ استعمال کریں۔

چہرے اور جلد پر موجود نشانات اور داغ دھبے دور کرنے کے لئے کئی کریمیں اور ٹوٹکے استعمال کرنے کی بجائے اب صرف کیلوں کے چھلکوں کا یہ صاف پانی استعمال کریں اور پائیں انتہائی صاف شفاف اور بے داغ جلد۔کیلوں کے چھلکوں کا پانی جس میں چھلکے بھیگے ہوئے ہوں اس میں ایک چمچ سوڈا اور ایک چمچ نمک ڈال کر اچھی طرح مکس کر لیں ۔ اور اب اس پانی کو چہرے اور باقی جلد پر اس جگہ لگائیں جہاں نشانات ہیں اور پھر 20 منٹ کے لئے اس کو ایسے ہی چھوڑ دیں ۔ اس کے بعد آپ روئی کو پانی میں بھگو کر اس سے اپنے چہرے کو صاف کر لیں۔

Show More

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button