Wazaifاسلامگھریلو ،سائلوظائف

پہلی ہی سحری میں 3بار یہ دعا پڑھ لیں سخت سے سخت حاجت پوری ہوجائیگی

اللہ تعالیٰ کا ذکر اطمینانِ قلب اور راحت جاں کا سبب ہے ۔نبی کریم ﷺ نے بار بار اپنے ارشادات سے ذکر اللہ کی اہمیت کو اجاگر کیا ہے۔ ذکر عربی زبان کا لفظ ہے جس کے لغوی معانی یاد کرنا ،یاد تازہ کرنا ،کسی شئے کو بار بار ذہن میں لانا کسی چیز کو دہرانا اور دل و زبان سے یاد کرنا ہیں۔ذکر الہٰی یادِ الہٰی سے عبارت ہے


ذکر الہٰی کا مفہوم یہ ہے کہ بندہ ہر وقت اور ہر حالت میں۔ اٹھتے بیٹھتے اور لیٹتے اپنے معبود حقیقی کو یاد رکھے اور اس کی یاد سے کبھی غافل نہ ہو۔ ذکر الہٰی ہر عبادت کی اصل ہے تمام جنوں اور انسانوں کی تخلیق کا مقصد عبادت الہٰی ہے اور تمام عبادات کا مقصودِ اصلی یادِ الہٰی ہے ۔کوئی عبادت اور کوئی نیکی اللہ تعالیٰ کے ذکر اور یاد سے خالی نہیں۔ سب سے پہلی فرض عبادت نماز کا بھی یہی مقصد ہے کہ اللہ تعالیٰ کے ذکر کو دوام حاصل ہو اور وہ ہمہ وقت جاری رہے ۔نفسانی خواہشات کو مقررہ وقت کے لئے روکے رکھنے کا نام روزہ ہے۔ جس کا مقصد دل کو ذکر الہٰی کی طرف راغب کرنا ہے ۔روزہ نفس انسانی میں پاکیزگی پیدا کرتا ہے اور دل کی زمین کو ہموار کرتا ہے تاکہ اس میں یاد الہٰی کا ہی ظہور ہو ۔قرآن حکیم پڑھنا افضل ہے کیونکہ یہ اللہ تعالیٰ کا کلام ہے اور سارے کا سارا اسی کے ذکر سے بھرا ہوا ہے۔ اس کی تلاوت اللہ تعالیٰ کے ذکر کو تر و تازہ رکھتی ہے۔ معلوم ہوا کہ تمام عبادات کی اصل ذکرِ الہٰی ہے اور ہر عبادت کسی نہ کسی صورت میں یادِ الہٰی کا ذریعہ ہے ۔مردِ مومن کی یہ پہچان ہے کہ وہ جب بھی کوئی نیک عمل کرے تو اس کا مطمعِ نظر اور نصب العین فقط رضائے الہٰی کا حصول ہو ۔یوں

ذکرِ الہٰی رضائے الہٰی کا زینہ قرار پاتا ہے۔ اس اہمیت کے پیش نظر قرآن و سنت میں جابجا ذکر الہٰی کی تاکید کی گئی ہے۔ کثرت ذکر محبت الہٰی کا اولین تقاضا ہے :انسانی فطرت ہے کہ وہ اس چیز کو ہمیشہ یاد کرتا ہے جس کے ساتھ اس کا لگاؤ کی حدتک گہرا تعلق ہو ۔وہ کسی صورت میں بھی اسے بھلانے کے لئے تیار نہیں ہوتا۔ ِ اللہ تعالیٰ ان کی اس کاوش کو قبول فرمائے اوراسے عامۃ الناس کےلیے نفع بخش بنائے۔آج ایک بہت خاص وظیفہ لیکر حاضر ہوئے ہیں ۔آج 29شعبان المعظم شریف کا بابرکت دن ہے اور رمضان شریف کی آمد ہے ۔ اللہ تعالیٰ ہمیں رمضان شریف کی آمد کا صدقہ ہماری تمام مشکلات وپریشانیوں کو دور فرمائے اور اللہ تعالیٰ ہماری تمام نیک مقاصد کو پورا فرمائے ۔ آپ نے پہلی سحری کے وقت ہی آذان سے پہلے باوضو حالت میں اول وآخر گیارہ مرتبہ درود پاک پڑھنا ہے اور درمیان کے اندر 3مرتبہ لاحول ولاقوۃ الا باللہ العلی العظیم یہ وہ کلمات ہیں جن کے بارے اللہ تعالیٰ نے ارشاد فرمایا ہے کہ میرے عرش کے نیچے ایک خاص خزانہ موجود ہے میں نے اس خاص خزانہ سے یہ کلمات امت مصطفیٰﷺ کو عطاء فرمائے ہیں جو میرا بندہ مشکل وقت میں یہ کلمات پڑھے گا ۔ میں اس کی سخت سے سخت حاجت پوری فرماؤں گا ۔

Show More

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button