urdu maloomatUrdu Tipsصحت

موٹاپا اور وزن کم کرنا بہت آسان مگر کیسے ؟

بڑھتی عمر کے ساتھ ساتھ وزن کا بڑھنا یا موٹاپا بھی زندگی کومشکل بنا دیتا ہے ۔ پھر اس موٹاپے کو ختم کرنے کے لیے بہت سارے جتن کرنا پڑتے ہیں لیکن مستقل مزاجی کی کمی کے باعث موٹاپا جان نہیں چھوڑتا ۔ اگر آپ کا وزن بھی زیادہ ہے تو یہ آپ کی جوڑوں، ہڈیوں، اور پٹھوں پر بھی دباؤ ڈال کر انہیں تناؤ کا شکار کر دیتا ہے لہٰذا یہ بہت ضروری ہے کہ ورزش کو اپنا معمول بنا لیا جائے تاکہ نہ صرف ظاہری طور پر آپ فٹ نظر آئیں بلکہ آپ کی اندرونی صحت بھی مستقل طور پر ٹھیک رہے۔

آج ہم آپ کو بتائیں گے کہ کون سی ورزش آپ کے لیے مفید ہو گی ۔ جو آپ کے پٹھوں اور جوڑوں میں لچک پیدا کرنے کے ساتھ ساتھ انہیں طاقت ور بھی بنائے گی۔ اگر آپ نے وزن کم کرنے کے لیے ابھی ورزش شروع کرنی ہے تو پھر چہل قدمی ورزش کا بہترین طریقہ ہے۔ چہل قدمی جسم میں خون کی گردش کو برقرار رکھتی ہے ۔ یہ پھیپھڑوں کی صلاحیت میں بھی اضافہ کرتی ہے اور جسم میں دیگر افعال کو بھی بہترین بنا دیتی ہے ۔

اس سے وزن تیزی سے کم ہونا شروع ہوتا ہے ۔چہل قدمی کے مقابلے میں جاگنگ وزن کم کرنے کے لیے زیادہ مفید ہوتی ہے ۔ لیکن اسے آہستہ آہستہ معمول میں شامل کرنا چاہئے ورنہ یہ آپ کی ٹانگوں اور جوڑوں میں تناؤ کا باعث بن جاتی ہے۔ اپنے جسم کی طاقت اور لچک کو آہستہ آہستہ بڑھانا ضروری ہوتا ہے نا کہ ایک دم ۔

اسٹیشنری سائیکل آپ کے جسم کی طاقت اور لچک کو بغیر کسی دباؤ کے بڑھاتی ہے اور یہ وزن کم کرنے کا بہت بہترین طریقہ بھی ہے۔ چونکہ اسٹیشنری بائک کو اپنی سہولت کے مطابق روکا بھی جا سکتا ہے اور یہ سائیکل چلانے کا ایک صحت مند اور متبادل ذریعہ ہے۔ ورزشیں جیسا کہ سکواٹس، پش اپس لگانا وغیرہ زیادہ وزن کے حامل افراد کے لیے شروع میں بہت تکلیف دہ ہو سکتا ہے لیکن اگر انہیں ہم معمول کا حصہ بنا لیں تو وزن میں حیرت انگیز طور پر کمی ممکن ہے۔

پانی کی ایروبکس اور تیراکی ابتدائی طور پر وزن کم کرنے کے بہترین طریقوں میں سے ایک ہے ۔ یوگا بھی وزن کم کرنے کا ایک مقبول اور انتہائی بہترین طریقہ ہے کیوں کہ اس کے بے شمار طبی فوائد بھی ہیں ۔ اس کے ساتھ ساتھ یہ ہمیں ذہنی طور پر بھی پُرسکون رکھنے میں مدد فراہم کرتا ہے۔ جدید دور میں جسمانی اور ذہنی طور پر چاک و چوبند رہنے کے لیے یوگا کی ورزشوں کو بہترین ورزشیں خیال کیا جاتا ہے۔ ہمیشہ یاد رکھیں کہ باقدعدگی سے ورزش کرنے اور مصروف رہنے سے وزن میں نمایاں کمی واقع آ جاتی ہے ۔

مشروبات کو ہمیشہ گھونٹ گھونٹ کر کے پینا چاہیے ۔ ہر بار کھانا کھانے سے پہلے پانی ضرور پئیں اور کھانے کے بعد کوشش کریں کہ آدھا گھنٹہ یا پھر ایک گھنٹے بعد ہی پانی پئیں۔ اس کے علاوہ کھانے کے ساتھ سلاد کو اپنی خوراک کا حصہ لازمی بنائیں ۔ سلاد ہمیشہ کھانے سے پہلے کھائیں کیوں کہ یہ کھانا کو ہضم کرنے میں ہمیں مدد دیتا ہے ۔

Show More

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button