اسلام

حضور صلی اللہ تعالٰی علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم نے فرمایا جو اس سورت کو دس بار پڑھے گا اللہ تعالیٰ اس کے لیے جنت میں ۔۔۔

اللہ کو مخلص اور محسن لوگ بے حد پسند ہیں۔ یہی وہ لوگ ہیں جن کی دعاوں میں برکت ہوتی ہے اور دعائیں مستجاب ہوتی ہیں۔میں نے اب تک دیکھا ہے اور یہ مشاہدہ کیا ہے کہ جو لوگ اللہ سے خلوص نیت سے مانگتے ہیں چاہے وہ روحانی معاملہ ہو یا مادی معاملہ اس کی دعا قبول ہوئی ہے۔ایسے لوگوں کو میں نے اکثر سورہ اخلاص کا ذکر کرتے ہوئے دیکھا ہے ۔ جو لوگ روزانہ تین سو بار سورہ اخلاص چالیس روز تک پڑھتے ہیں ،پاکیزگی قائم رکھتے ہیں، ان میں بزرگی پیدا ہوجاتی ہے۔ وہ ہر شعبہ زندگی میں کامیاب ہوتے ہیں۔

آپ صلی اللہ تعالٰی علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم کا فرمان ہے ’’ جو شخص سورۃ اخلاص کو دس مرتبہ پڑھ لے گا ، اللہ تعالیٰ اس کیلئے جنت میں ایک محل تعمیر کر دے گا‘‘
حضرت عمر رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے پوچھا ’’ یارسول اللہ صلی اللہ تعالٰی علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم ! پھر تو ہم بہت سے محل بنوا لیں گے؟
آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا’’اللہ رب العزت اس سے بھی زیادہ اور اس سے بھی اچھا دینے والا ہے۔‘‘
سورہ اخلاص پڑھنے والے عداوتوں اور بیماریوں سے محفوظ رہتے ہیں،میاں بیوی میں محبت بڑھ جاتی ہے،رشتوں میں اخلاص پیدا ہوجاتا ہے، اگر کاروبار مندا چل رہا ہوتو کاروبار بڑھ جاتا ہے۔جو سورہ اخلاص کا وظیفہ کرتا ہے اسے زندگی کی بہت بڑی کامیابیاں مل جاتی ہیں۔

Show More

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button